جمعہ, مئی 24, 2024
spot_img
ہومبلوچستان‏کوئٹہ: رواں سال اگست میں جبری لاپتہ محمد یوسف نیچاری اور محمد...

‏کوئٹہ: رواں سال اگست میں جبری لاپتہ محمد یوسف نیچاری اور محمد شفیع بنگلزئی کو سی ٹی ڈی نے جعلی مقابلہ میں مارنے کا دعویٰ کیا ہے۔ وی بی ایم پی

وائس فار بلوچ مسنگ پرسنز کی جانب سے جاری کردہ پریس ریلیز میں کہا گیا ہیکہ سی ٹی ڈی نے گزشتہ دنوں ہزار گنجی کوئٹہ میں دو نوجوانوں کو مقابلے میں مارنے کا دعوی کیا تھا جن میں سے ایک کی شناخت محمد یوسف نیچاری کے نام سے ہوئی ہے، جنہیں سی ٹی ڈی نے رواں سال 26 اگست کو نیچاری آباد کلی بڑو سے جبری لاپتہ کیا تھا۔ جبکہ دوسرے کی شناخت محمد شفع بنگلزئی کے نام سے ہوئی ہے جن کو 13 اگست کو انکے بھائی سلمان کے ساتھ پرکانی اسٹریٹ کوئٹہ سےفورسزنےجبری لاپتہ کیا تھا۔

وی بی ایم پی کے چیرمین نے اپنے ٹویٹ میں کہا ہیکہ ‏دوران حراست محمد یوسف کا قتل ماورائے آئین اقدام ہے جو انسانی حقوق کی سنگین خلاف ورزی ہے جسکی مذمت کرتے ہیں اور مطالبہ کرتے ہیں کہ اس واقعہ میں ملوث اہلکاروں کے خلاف کاروائی کی جائے اور ساتھ میں یہ بھی مطالبہ کرتے ہیں جو ریاست کا مجرم ہے اسے عدالت کے ذریعے سزا دی جائے۔

متعلقہ مضامین

جواب چھوڑ دیں

براہ مہربانی اپنی رائے درج کریں!
اپنا نام یہاں درج کریں

تازہ ترین