جمعہ, مئی 24, 2024
spot_img
ہومخبریںتربت: کیچ کی سیاسی کلچر کو پراگندہ کرنے کی اجازت نہیں دینگے،...

تربت: کیچ کی سیاسی کلچر کو پراگندہ کرنے کی اجازت نہیں دینگے، کرایہ کے لوگوں کی ریلی اخلاقیات کے دائرے سے باہر تھی۔ عابد عمر و دیگر کی پریس کانفرنس

بی ایس او پجار بلوچستان کے سابق صوبائی جنرل سیکرٹری عابد عمر بلوچ نے کہاکہ کیچ کی سیاسی کلچر کو غلط رنگ دینے کی کوشش بلوچ سماج اوربلوچ سیاست کے خلاف مذموم سازش کا حصہ ہے جس کی بلوچ سماج میں اجازت نہیں دی جاسکتی، کل کرایہ کے لوگوں کی ریلی میں اخلاقیات کے دائرے سے ہٹ کر منفی اور غلیظ زبان استعمال کی گئی۔

سرکاری محکموں اور اداروں کو تباہ کرنے اورمفلوج بنانے کے بعد اب سیاست کوبھی پراگندہ کرنے کی کوشش کی جارہی ہے۔

ان خیالات کااظہار انہوں نے پیر کے روز تربت پریس کلب میں پریس کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے کیا، پریس کانفرنس میں بی ایس او پجارتربت زون کے رہنما مہران عطاء، یاسربیبگر، نیشنل پارٹی کے رہنما فضل بلوچ، اقبال بلوچ، یونس جاوید ودیگر موجودتھے۔

عابد عمر بلوچ نے کہاکہ 5سال میں حکومت میں ہونے کے باوجود کسی بے روزگار کو کوئی ملازمت نہیں دلائی گئی اب جبکہ حکومت ختم ہونے میں آخری ہفتہ باقی ہے، لوگوں کو دھوکہ میں رکھنے کیلئے ملازمتوں کے اشتہار جاری کرکے لوگوں کی ہمدردیاں سمیٹنے کی ناکام کوشش کی گئی اگر وہ غریبوں کا اتنا ہمدرد اور خیرخواہ ہے تو اسے اس طویل عرصہ میں کس نے ملازمتیں دینے سے روکا تھا۔

2022ء اور2023ء کے ابتداء میں بھی محکمہ صحت، مکران میڈیکل کالج میں ٹیسٹ وانٹرویوز ہوئے تھے ان کی پوسٹنگ کیوں کر نہیں ہوئی، صوبائی وزیر صحت کی کسی قسم کی کوئی کارکردگی نظرنہیں آتی، اربوں روپے کے 25ٹینڈرز کرائے گئے مگر ایک روپے کاکام بھی نہیں ہواہے تاریخ میں پہلی مرتبہ حکومت نے اپوزیشن کے خلاف ریلی نکالی ہے جو بوکھلاہٹ کے سواکچھ نہیں مگر اس طرح کے مذموم ہتھکنڈوں سے غریبوں کی ہمدردیاں نہیں سمیٹی جاسکتیں اگر صوبائی وزیر سمجھتے ہیں کہ ہائی کورٹ نے اسٹے آرڈر دے کر کوئی ناانصافی کی ہے تو وہ اس کے خلاف سپریم کورٹ کیوں نہیں گئے۔

انہوں نے کہاکہ عدالت نے پوسٹوں کو ختم نہیں کیا ہے بلکہ غلط طریقہ کار، میرٹ کی پامالی کی شکایت پر حکم امتناعی جاری کی ہے، عدالت کا یہ اسٹے آرڈر بالکل انصاف کے تقاضوں کے عین مطابق ہے کیونکہ نام نہاد ریلی میں ہرکوئی کہہ رہاتھا کہ مجھے وزیر صحت نے کہاہے کہ آپ کے آرڈر ہورہے ہیں یہ کیسی میرٹ ہے کہ اشتہار ابھی آیاہے اور آرڈر پہلے سے تیارہیں۔

انہوں نے کہاکہ ایری گیشن، ایجوکیشن، ہیلتھ ودیگر محکموں کے پوسٹوں کے ریٹ مقرر ہیں انہوں نے کہاکہ ڈاکٹرمالک جیسے قدآور سیاسی قائد کے خلاف بازاری اورناشائستہ زبان کا استعمال بوکھلاہٹ کے سواکچھ بھی نہیں ہے انہوں نے کہاکہ بی ایس او پجار اداروں کو تباہ کرنے کی اجازت نہیں دے گی، 5سال زیرو کارکردگی کی بناء پر عوام کا سامنا کرنے سے کترانے والے آخری وقت پر ڈرامہ بازیوں کے ذریعے اپنی نااہلی دوسروں کے کندھے پر ڈالنا چاہتے ہیں۔

متعلقہ مضامین

جواب چھوڑ دیں

براہ مہربانی اپنی رائے درج کریں!
اپنا نام یہاں درج کریں

تازہ ترین