بدھ, مئی 22, 2024
spot_img
ہومبلاگاستاد کا کردار

استاد کا کردار

تحریر: سمیرا محمد اسلم

اسلام میں استاد کا درجہ بہت بلند ہے۔ معلم کا پیشہ پیغمبری پیشہ ہے۔ استاد وہ چراغ ہے جو ہر طرف روشنی پھیلاتا ہے جو شعور بیدار کرتا ہے۔ صحیح اور غلط میں فرق بتاتا ہے۔ استاد وہ درخت ہے جو سایہ فراہم کرتا ہے۔ یہ وہ جڑ ہے جو شاخوں کو مضبوط بناتی ہے۔ جب بات کسی ہم جہت، بے مثال اور عزیز شخصیت کی ہو تو تحریر کا حق ادا کرنا مشکل ہو جاتا ہے۔ ایسے ہی ایک شخصیت میرے محترم استاد "ڈاکٹر اسٹیفن "کی ہے۔

 استاد ہی اپنے شاگرد کی روحانی, علمی اور اخلاقی تربیت کرتا ہے۔ میرا ناقص علم اور محدود ذخیرہ الفاظ ان کی شخصیت کو احاطہ تحریر میں لانے سے قاضر ہے۔ لیکن پھر بھی چند سطور تحریر کرنے کی جسارت کر رہی ہوں۔

"ڈاکٹر  اسٹیفن”باکردار اور بااخلاق استاد ہیں جو اپنے شاگردوں کے لیے بہ یک وقت ایک بارعب شخصیت  ہیں۔زندگی کے ہر پہلو سے متعلق رہنمائی حاصل کرنے کے لیے شاگرد "سر” سے رجوع کرتے ہیں۔ وہ کتنے ہی اہم امور میں مصروف کیوں نہ ہو طلبہ کو کبھی مایوس نہیں لوٹاتے، وہ اپنے شاگردوں میں کوئی امتیاز بھی نہیں برتتے بلکہ طلبہ کو انسانی ہمدردی خلوص اور درد مندی جیسے اعلی صفات پیدا کرنے کا درس دیتے ہیں وہ اپنے طلبہ کی تدریس کے ساتھ ساتھ ان کی تربیت  پربھی توجہ دیتے ہیں۔

جب سر کلاس میں داخل ہوتے ہیں تو طلبہ اپنے اپ کو پہلے سے زیادہ پر اعتماد محسوس کرتے ہیں وہ اپنے شاگردوں کی ہر ممکن حد تک حوصلہ افزائی کرتے ہیں تاکہ طلبہ کے اندر چھپی صلاحیتیں سامنے آسکیں۔ ایک بہترین استاد ہونے کے باوجود ان کے عمل سے کبھی غرور و تکبر یا خود پسندی کی جھلک نظر نہیں آئی، وہ طلبہ کی نفسیات اچھی طرح جانتے ہیں اور سمجھتے ہیں انتہائی توجہ سے کلاس کے ہر طالب علم کا سوال سنتے ہیں اسی لیے طلبہ "سر” کے لیکچر چھوڑنے کا تصور بھی نہیں کر سکتے۔ طبیعت میں حد درجہ اعتدال اور ٹہراؤ، مثبت سوچ، مضمون پر مکمل عبور اور تدریس کے فن سے مکمل اگاہی کی وجہ سے”سر” کو مثالی استاد کی حیثیت حاصل ہے۔ یہ ایسے استاد ہیں جو دل سے پڑھاتے ہیں” سر ” آج بھی یونیورسٹی میں اپنے خدمات سر انجام دے رہے ہیں۔ زندہ قومیں ہمیشہ اپنے اساتذہ کا احترام کرتی ہے کیونکہ قوم کی تعمیر و ترقی میں اساتذہ کا کردار سب سے زیادہ اہم ہوتا ہے۔

متعلقہ مضامین

جواب چھوڑ دیں

براہ مہربانی اپنی رائے درج کریں!
اپنا نام یہاں درج کریں

تازہ ترین